اردو | العربیہ | English



اردو | العربیہ | English

خلیجِ عمان کے آئل ٹینکر حملوں میں ایران ملوث ہے: امریکی وزیر خارجہ

شاہ سلمان کی آمد ۔۔۔بہار کی آمد


WhatsApp
182



شاہ سلمان کی آمد ۔۔۔بہار کی آمد

تحریر ۔۔ محمد جمیل راہی ایڈووکیٹ

عالم اسلام کے ماتھے کا جھومر ، خادمِ حرمینِ شریفین ، ولی عہد حکومت سعودی عرب شہزادہ محمد بن سلمان بن عبد العزیز کی مملکت خداداد پاکستان متوقع آمد ایک ایسا تاریخی موقع ہے جس پر پوری دنیا کی نظریں جمی ہوئی ہیں، پاک سعودیہ تعلقات ایک ایسے مضبوط ، مربوط ، مذہبی و تاریخی بنیادوں پر پیوست ہیں کہ جن کی بابت حقیقی طور پر کہا جا سکتا ہے کہ ان کی گہرائی گوادر کی گہرائیوں سے زیادہ ماؤنٹ ایورسٹ کی بلندیوں سے ماوراء اور ’’اجوا‘‘ کھجور کی مٹھاس کی مانند ہے۔

دونوں ملک یک جان دو قالب کی مثال ہیں، ان باہم مودّب و اخوت کے رشتوں کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ جب پاکستان نے بھارتی تسلط پسندانہ سوچ کی راہ میں بند باندھنے کے لیے جوابی طور پر 1998ء میں ایٹمی دھماکے کیے تو ایٹمی قوت بننے کی خوشی دیگر اسلامی ممالک سمیت سب سے زیادہ سعودی عرب میں منائی گئی۔ جب ساری دنیا اقتصادی پابندیاں عائد کر رہی تھی یہ خادمینِ حرمین شریفین ہی تھے جنہوں نے نہ صرف دل کھول کر پاکستان کی مدد کی بلکہ اپنی تمام تر حمایت اور تعاون کوپاکستان کے پلڑے میں ڈال دیا

،دوسری جانب پاکستانی قوم ’’خاکِ مکہ ومدینہ‘‘ کو اپنی آنکھوں کا سرمہ سمجھتی ہے۔سرزمینِ حرم کے تقدس و حرمت کی حفاظت کرنا اپنا مذہبی و قومی فریضہ سمجھتی ہے، پاکستانی فوج کا ہر سپاہی سرزمینِ حرم کی حفاظت کی ڈیوٹی سر انجام دینا نہ صرف اعزاز سمجھتا ہے بلکہ اس کے خواب دیکھتا ہے، یہ قوم عرب فرمانر واؤں سے کس قدر گہری عقیدت رکھتی ہے اس کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ پاکستان میں شہروں، قومی شاہراؤں اور یادگاروں کے نام ان سے منسوب ہیں، اسی تناظر میں شہزادہ محمد بن سلمان کے دورے کو دیکھا جا رہا ہے، پاکستانی قوم کے ساتھ ساتھ افواجِ وطن کے چاک و چوبند دستے بھی معزز ترین مہمان کو گارڈر آف آنر اور سلامی دینے کو تیار ہیں۔

سچ یہ ہے اس دورے کو ممکن بنانے اور اس کی کامیابی کا سہرا بھی افواجِ پاکستان ہی کی کوششوں اور کردار کا مرہونِ منت ہے ، عساکرِ وطن کے سابقہ سربراہ جنرل راحیل شریف خصوصی طور پر سعودی عرب سے اپنے دستوں کے ہمراہ پہنچ چکے ہیں ، عساکرِ وطن پر سعودی فرمانرواؤں کے اعتماد اور یقین کا اندازہ لگانے کے لیے یہی کافی ہے کہ داعش کی سعودی عرب کو دی جانے والی دھمکی کے بعد 41اسلامی ممالک کی جو مشترکہ فوج تشکیل دی گئی تھی اس کی کمانڈ جنرل راحیل شریف کے سپرد ہے ۔

شہزادہ محمد بن سلمان ایک ایسے موقع پر اپنا تاریخی دورہ کر رہے ہیں جو دور رس اثرات کا حامل ہوگا، پاکستان اس وقت اقتصادی بدحالی کے بد ترین دور سے گذر رہا ہے۔حکومت نے اس دورے سے بڑی اُمیدیں وابستہ کر رکھی ہیں جس کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ تقریباً بیس بلین ڈالر کے نئے معاہدات ہونے کی توقع ہے۔

گیارہ سو افراد پر مشتمل سعودی وفد کی آمد پر غیر معمولی انتظامات دیکھنے کو نظر آرہے ہیں، تین سو بسوں کا قافلہ اور 80کنٹینرز میں شاہی وفد کا سامان پہنچ چکا ہے ، شہزادے کا قیام وزیرِ اعظم ہاؤس اسلام آباد میں ہوگا۔

پاکستانی تاریخ میں یہ پہلی مرتبہ ہوگا کہ کوئی سربراہِ مملکت وزیرِ اعظم ہاؤس میں سرکاری مہمان بنا ہو، اس مقصد کے لیے تمام تر انتظامات مکمل کیے جا چکے ہیں، سعودی حکمران اکتوبر2018ء میں نئی حکومت کے وزیرِ اعظم کو چھ ارب روپے کا پیکج دے چکی ہے جس میں تین ارب کیش اور تین ارب تیل کی مدمیں دیا گیا۔

شاہ محمد بن سلمان ایک عملی اور ترقی پسند حکمران ہے، اپنے وژن 2030ء کو آگے بڑھانے کے لیے وہ اپنے ملک کی خاطر جہاں دیگر ممالک سے روابط کر رہا ہے اُسی تناظر میں اس کی دلچسپی پاکستان کے بارے میں بھی نظر آرہی ہے، ان کی دلچسپی پاک چائنہ پراجیکٹ سی پیک گوادر، گیس ، آئل ریفانریز ، پیٹیرو کیمیکل ، ری نیو ایبل انرجی اور مائننگ میں نظر آتی ہے۔

اگلے ہفتے پاکستان میں ایک بین الاقوامی کانفرنس منعقد ہونے جا رہی ہے جس میں شاہی وفد کے ساتھ آنے والے ’’آرامکو‘‘ کمپنی کیے سی او سمیت 100نجی سعودی پاکستانی کاروباری شرکت کریں گے۔سعودی حکومت بہاولپور سولر پلانٹ، حویلی بہادر شاہ پاور پلانٹ اور بھکی پاورپلانٹ پر سرمایہ کاری میں دلچسپی رکھتی ہے۔چار معاہدات پر دستخط ہونے کی توقع ہے، شہزادے کے بارے کہا جا تا ہے کہ وہ ایسا بنیاد پرست حکمران ہے جو نظریات میں الحقانی اور معاشی ترقی میں ابو ظہبی کے شہزادے سے متاثر ہے، اس نے ملک میں سماجی، معاشی اور ترقی پسندانہ انقلابی تبدیلیوں کو متعارف کروایا ہے جس میں خواتین پر بعض پابندیاں ہٹا کر ان کو قومی دھارے میں شامل کرنا ، سینما گھروں اور تھیڑوں پر مخلوط پروگرامات کی اجازت دینا، مذہبی پولیس کے اختیارات میں تبدیلیاں ، خواتین کو اسٹیڈیم جانے ، تنہا گاڑی چلانے اور کاروبار کرنے کی اجازت دینا سمیت بین الاقوامی سیاحوں کے لیے پابندیاں نرم کرنا شامل ہے۔نئے ٹیکسوں کا اجراء ، سبسڈی کا خاتمہ جیسے اقدامات کو نیشنل ٹرانسفارمیشن پروگرام کا نام دیا گیا، کرپشن کے خاتمہ اور قومی خزانے کی حالت بہتر بنانے کے لیے انقلابی اقدامات کے لیے دو سو سے زائد شہزادوں اور کاروباری افراد کو گرفتار کر کے ان سے رقوم وصول کیں جو 102بلین بتائی جاتی ہیں۔

2018ء میں شہزادے نے’’قومی و سرمایہ کاری‘‘ فنڈ قائم کیا جس کی موجودہ مالیت 400بلین ڈالر بتائی جاتی ہے جبکہ ہدف 600ملین ڈالر ہے(2020)۔۔۔پاکستان سعودی حکومت کی خارجہ پالیسی اور نئے اقدامات کی حمایت کرتا آیا ہے، سابقہ وزیرِ اعظم نواز شریف نے دعویٰ کیا ہے کہ موجودہ پیکج کا وعدہ ان کے ساتھ کیا گیا تھا اور معاملات ریاستی سطح پر طے ہونے میں وقت لگتا ہے اس لیے اس کا کریڈٹ موجودہ حکومت لے رہی ہے اورموجودہ حکومت ہماری ہی معاشی پالیسیوں پر گامزن ہے۔

خطے میں رونما ہونے والی ممکنہ تبدیلیوں کے پیشِ نظر موجودہ دور ہ بڑی اہمیت اختیا ر کر چکا ہے ۔حکمران اور اپوزیشن کی ذمہ داریاں دہری بن چکی ہیں،معاشی مسائل پر قابو پانے کے ساتھ ملکی سلامتی و بقاء کے پہلوؤں پر بھی گہری نظر رکھنا ۔۔۔ حکومت کو چاہیے کہ اپوزیشن کو بھی شہزادے کے استقبال کی دعوت دے ، اس سے قومی یکجہتی کا اقوامِ عالم کو بھی ایک مثبت پیغام جائے گا۔

شاہی وفد سے بھی نئے معاہدات کی نوید یں قوم کو سنائی جا رہی ہیں لیکن سوال یہ ہے کہ کیا بہار کی آمد پر شاہی وفد کا یہ دورہ ارضِ وطن کے لیے معاشی اُمید کی کونپلیں پھوٹنے کا حقیقی سبب بن پائے گایا پھر اُسی انگریزی محاورے کو پیش نظر رکھنا ہوگا؟؟؟

"There are so many slips b/w cups and lips"
یعنی کپ اور ہونٹوں کے درمیان ابھی بہت سے مرحلے آنے ہیں، امید پر دنیا قائم ہے ، عربوں کی پاکستان کے ساتھ فراخ دلی اور دلجوئی و تعاون کی ایک شاندار روایت رہی ہے ، امید ہے وہ اس بار بھی اپنے میزبانوں کو مایوس نہیں کریں گے، پاک فوج کی دی گئی ضمانتیں سیاسی قیادتوں کے عہد و پیمان پر بھاری ہی رہیں گے۔۔۔ قوم مثبت اُمید رکھے۔














WhatsApp




متعلقہ خبریں
بھٹو کیوں زندہ ہے؟ ... مزید پڑھیں
شاہ سلمان کی آمد ۔۔۔بہار کی آمد ... مزید پڑھیں
افغان باقی، کہسار باقی ... مزید پڑھیں
اقلیتوں کا عالمی دن۔۔۔تجزیہ ... مزید پڑھیں
ارض حرمین پر منڈلاتی گھٹائیں ... مزید پڑھیں
سانپ اور سیڑھی کا کھیل ... مزید پڑھیں
اسرائیلی تاریخ ... مزید پڑھیں
آسیہ" نامی عیسائی عورت اور ہمارا قانون ... مزید پڑھیں
ارضِ حرمین پر منڈلاتی گھٹائیں ... مزید پڑھیں
حکمرانوں کے تابناک اور روشن کردار ... مزید پڑھیں
فاطمہ بنت پاکستان کا مقدمہ ... مزید پڑھیں
یہ رہی تمہاری تلاش ... مزید پڑھیں
اقوام متحدہ کے اجلاس کی روداد ... مزید پڑھیں
القدس اپنے محافظ کی تلاش میں ... مزید پڑھیں
یوم یکجہتی کشمیر کا تاریخی تعاقب و اہمیت ... مزید پڑھیں
بنیادی حقوق کا’’سراب‘‘ ... مزید پڑھیں
متعلقہ خبریں
ٹیم اور کپتان
بھٹو کیوں زندہ ہے؟
شاہ سلمان کی آمد ۔۔۔بہار کی آمد
افغان باقی، کہسار باقی
اقلیتوں کا عالمی دن۔۔۔تجزیہ
ارض حرمین پر منڈلاتی گھٹائیں
سانپ اور سیڑھی کا کھیل
اسرائیلی تاریخ
آسیہ" نامی عیسائی عورت اور ہمارا قانون
ارضِ حرمین پر منڈلاتی گھٹائیں

مقبول خبریں
کرپشن کے خاتمے کے لیے فریم ورک بنانا ہوگا: وزیراعظم
خلیجِ عمان کے آئل ٹینکر حملوں میں ایران ملوث ہے: امریکی وزیر خارجہ
ٹوئنٹی 20 کرکٹ میں گرین شرٹس کی حکمرانی برقرار
پی ایس ایل 4؛ شریک پلیئرز کو2 دن آرام کا موقع میسر آ گیا
شادی کے 11 سال بعد ایشوریا رائے کا ابھیشک بچن سے متعلق اہم انکشاف
ٹیم اور کپتان
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔
جدید طب کا کمال : ماں کے پیٹ میں دل کے مرض میں مبتلا بچی کا علاج
’یونیورسٹی تو کیا، پاکستان کی تاریخ میں کسی نے اتنے میڈل نہیں لیے‘
ہیری پورٹرکی مداح خاتون کا نام گنیزبک آف ورلڈ ریکارڈ میں شامل
ہیری پورٹرکی مداح خاتون کا نام گنیزبک آف ورلڈ ریکارڈ میں شامل
گوگل کی جانب سے ویڈیو گیم اسٹریمنگ کا باضابطہ اعلان
شرح پیدائش پنجاب میں کتنی ہے اور خیبر پختونخوا میں کتنی؟ اعدادوشمار سامنے آگئے
بیویاں شوہروں کو طلاق دے سکیں گی والا نکاح نامہ زیرغور نہیں، اسلامی نظریاتی کونسل
حالیہ پاک۔بھارت بحران کشمیری حریت پسندوں کو کیا پیغام دیتا ہے؟
ویڈیو گیلری

آزادی کی تحریکوں کو دبایا تو جا سکتا ہے لیکن ختم نہیں کیا جا سکتا : پاکستانی ہائی کمشنرعبدالباسط

بھارتی اشتعال انگیزی کا ذمہ داری سے جواب دے رہے ہیں ،عاصم باجوہ

پاکستان اورسعودی عرب حقیقی بھائی ہیں،علما اکرام مسلم امت کے اتحاد میں کردار ادا کریں:امام کعبہ

بڈگام میں بھارتی فوج کی فائرنگ، مزید 8 کشمیری شہید، پاکستان کا شدید احتجاج

فرانس میں فائرنگ کرکے 3 افراد کوقتل کرنے والے حملہ آورکی ہلاکت کی تصدیق

سپورٹس
ٹوئنٹی 20 کرکٹ میں گرین شرٹس کی حکمرانی برقرار
دبئی(ویب ڈیسک) ٹوئنٹی 20 میں کرکٹ پاکستانی حکمرانی بدستور قائم ہے مزید پڑھیں ...
ویب ٹی وی
ٹورازم
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔ posted by Abdur مزید پڑھیں ...
انٹرٹینمینٹ
شادی کے 11 سال بعد ایشوریا رائے کا ابھیشک بچن سے متعلق اہم انکشاف
ممبئی (ویب ڈیسک) بولی وڈ اداکارہ اور سابق حسینہ عالم ایشوریا مزید پڑھیں ...
مذہب
بیویاں شوہروں کو طلاق دے سکیں گی والا نکاح نامہ زیرغور نہیں، اسلامی نظریاتی کونسل
اسلام آباد(ویب ڈیسک) اسلامی نظریاتی کونسل کا کہنا ہے کہ مزید پڑھیں ...
بزنس
سعودی عرب کی پاکستان کو 2 پاور پلانٹس خریدنے کی منہ مانگی پیشکش
لاہور(ویب ڈیسک) سعودی عرب نے پنجاب کے دو پاور پلانٹس بغیر بولی مزید پڑھیں ...