اردو | العربیہ | English



اردو | العربیہ | English

اس ہندوستانی نے 39 بار کیا پیار، 39 بار کی شادی اور ہیں 101 بچے

ہم سرسری سوچ والے


WhatsApp
77



ہم گہری سوچ والےموڈ سے شفٹ ہو کے سرسری سوچ پر آگئے ہیں۔ فوٹو: انٹرنیٹ

عوام خبر اور معلومات کو لے کر تجسس کا شکار نظر آتے ہیں۔ ہر وقت کچھ نہ کچھ نیا اور سنسنی خیر ملتے رہنے کو عرف عام میں انفارمیشن یا معلومات کا نام دیا جاسکتا ہے۔ انفارمیشن کے تجسس میں کچھ ایسے مگن کہ پورا پورا دن سوشل میڈیا سائٹ پر بیٹھے خاک چھانتے نہیں تھکتے۔ ایک کو شش جو آج کل ہر کوئی کرتا نظرآتا ہے وہ اپنے پاس نئی اور منفرد انفارمیشن کا انبار اکھٹا کرنا ہے جس سے عام لوگ بے خبر ہیں۔

انٹرنیٹ کی دنیا کے کیا کہنے… جہاں ہمیں پوری دنیا کی انفارمیشن سے رسائی آسان ہوئی تو وہیں ہم سے کچھ بہت قیمتی چیزیں دور بھی ہوتی چلی گئیں؛ جس میں ایک گہرائی میں اتر کے کسی چیز کو سوچنے اور پرکھنے کا مشاہدہ تھا۔ پہلے جب ڈیجیٹل میڈیا اتنا عام نہیں تھا تب انسانوں کے پاس خوشی اور تسکین حاصل کرنے کا ایک ذریعہ کتب بینی بھی تھا۔ قارئین خوشی حاصل کرنے کے لیے کتاب پڑھا کرتے تھے اور گھنٹوں ایک فکر کو لے کر اس پر گہری سوچ اور مشاہدے سے اپنی ایک رائے قائم کرتے تھے۔ اس کا واضح ثبوت پچھلی صدی کے شاہکار ڈراموں، فلمو ں اور کتابوں میں موجود علم اور اس سے ملنے والی انفارمیشن سے بخوبی لگایا جا سکتا ہے۔

ڈیجٹل دور نے سب سے پہلے جس چیز کو نشانہ بنایا وہ ہمارا فوکس اور سوچنے کی صلاحیت ہے، کہ جو آج کی نسل میں مفلوج ہو کر رہ گئی ہے۔ انٹرنیٹ پر ایک صفحے کا مضمون، دو چار ویڈیوز اورچند ایک پوسٹ پڑھ کہ یہ نسل سمجھتی ہے کہ علم میں خاطر خواہ اضافہ ہو گیا، لیکن حقیقت اس سے کہیں مختلف ہے؛ جس کو سرسری مشاہدہ یا سوچ کا نام بھی دیاجا سکتا ہے۔ جس میں نہ تو گہرائی ہے اور نہ پرکھنے کی صلاحیت۔

انٹرنیٹ کے زمانے سے قبل ہمارا دماغ زیادہ مرکوز ہو کر کام کرتا تھا اور گھنٹوں ایک فکر میں ڈوبا رہتا تھا۔ ایک ہی نقطہ نظر اور بیانیہ کو کئی کئی زاویوں سے سوچا جاتا تھا۔ یہی گہری سوچ ان انسانوں کی ذات کی عکاسی کرتی تھی جس میں تخلیقی صلاحتیں پھلتی پھولتی تھیں۔ اور اسی دور میں ہر شعبے میں بہترین تخلیق کار پیدا ہوئے جنہوں نے دنیا میں اپنی منفرد سوچ سےایک نام کمایا۔

پھر اس لفظ فاسٹ فوڈ نے ہمارے ذہنوں پر عجیب کمال کے اثرات ڈالے۔ آج سے دو دہائی پہلے آنے والا یہ کلچر اب کھانے کے ساتھ ساتھ ہماری زندگی کی ہر چیز میں عام ہو گیا ہے۔ ہم چاہتے ہیں کہ ہر چیز فاسٹ فاسٹ ہوتی جائے، حتیٰ کہ ہمارے دماغ کو جو انفارمیشن ملے وہ بھی فاسٹ اور سرسری سی ہو۔ اس کی سب سے بڑی مثال سوشل میڈیا کی انفارمیشن ہے جوکہ پہلے کتابوں اور گہرے مطالعے سے حاصل کی جاتی تھی لیکن اب فیس بک اسٹیٹس، ٹویٹس، ویب سائٹس اور مختصر ویڈیوز سے لی جانے لگی ہے۔ ٹویٹر آ گیا توبجائے اتنے بڑے مضمون پڑھنے کے، مختصر الفاظ میں بیانیہ پڑھو اور پھر یہ جا۔ وہ جا۔

اب ہمارا دماغ کسی چیز کی گہرائی میں جانا نہیں چاہتا، کسی بھی معلومات کے حصول کے لیے بس سرسری سا جائزہ کافی ہے؛ اور یہی چھوٹی چھوٹی انفارمیشن دماغ کو تھکا دیتی ہے۔ جس کی وجہ سے سوچ میں تخلیقی صلاحیتوں کی بہت کمی واقع ہو چکی ہے۔ منفرد سوچ والے لوگ اب ماضی کے قصے لگتے ہیں جنہوں نے اپنے زمانے کے لحاظ سے کیا کیا شاہکار بنائے۔

پوسٹ کرنا، ویڈیوز دیکھنا اور دوستوں سے گپ شپ سب کچھ ایک ساتھ چل رہا ہوتا ہے۔ ہم مسلسل ایک لنک سے دوسرے لنک پر شفٹ ہو جاتے ہیں جس سے دماغ گہری سوچ والے موڈ میں کبھی جاتا ہی نہیں ہے۔ بہت سارے کام ایک ساتھ کرنے کی وجہ سے توجہ ایک چیز سے ہٹ کے بہت سے کاموں پر بٹ کے رہ جاتی ہے۔ جس کا سب سے بڑا نقصان ہمیں ٹکڑوں میں ملنے والی بے فائدہ معلومات ہے جو ایک کان سے داخل ہوتے ساتھ ہی دوسرے سے نکل جاتی ہے۔ اور ہمارے علم اور یاداشت کا کبھی ایسا حصہ نہیں بن پاتی جس سے ہمیں مزید کچھ تخلیق کرنے میں مدد ملے۔

ہم گہری سوچ والےموڈ سے شفٹ ہو کے سرسری سوچ پر آگئے ہیں۔ اس کی سب سے بڑی مثال وہ اکتاہٹ اور بوریت ہے جو ہمیں کوئی طویل مضمون یا کتاب کو پڑھنے سے محسوس ہوتی ہے۔ اور اگر کبھی ہمت کر کے کچھ لمبا پڑھنے بیٹھ بھی جائیں تو دماغ مسلسل سگنل دے رہا ہوتا ہے کہ آخری نوٹیفیکیشن تو چیک کر لیا جائے۔ گہری سوچ ہماری نسل کے لیے کوئی قابل تعریف چیز نہیں رہی، بلکہ یہ معیوب خیال بن چکا ہے۔ اسی لیے آج گہری سوچ کا دریا سوکھتا ہوا نظر آتا ہے۔ جہاں پہلے طغیانی تھی، اب بنجر اور سطحی پن نمایاں ہے۔ جس میں سوائے تین چار انہونی باتوں اور بھڑکوں کے اب کچھ باقی نہیں رہا۔


WhatsApp




متعلقہ خبریں
ساہیوال کا واقعہ: سی ٹی ڈی پنجاب کیا ہے اور ... مزید پڑھیں
امریکی صدر نے افغانستان کی جنگ میں بھارت کے کردار ... مزید پڑھیں
" آپریشن آل آؤٹ "تجزیاتی رپورٹ ... مزید پڑھیں
مقدس مندر میں خواتین داخل‘ تاریخ رقم ، ہنگامے شروع ... مزید پڑھیں
انڈین کون ہیں اور کہاں سے آئے ہیں؟ انڈیا کی ... مزید پڑھیں
مسلمانوں کی خاموشی انڈیا کے مستقبل کے لیے خطرناک ... مزید پڑھیں
طالبان کابل پر قبضے کے لیے تیاری کر چکے ہیں ... مزید پڑھیں
غلط مرد سے محبت: ’پہلے دلت شوہر کو والد نے ... مزید پڑھیں
میکسیکو میں لاپتہ افراد کی لاشیں ڈھونڈتی مائیں ... مزید پڑھیں
افغان مذاکرات میں پاکستان کا کردار ناگزیر کیوں؟ ... مزید پڑھیں
مجھے دشمن کے بچوں کو پڑھانا ہے: سانحہ اے پی ... مزید پڑھیں
آئیے ہاتھ اٹھائیں ہم بھی... رسمِ دعا یاد ہو نہ ... مزید پڑھیں
اسرائیل ایک جعلی ملک؟ ... مزید پڑھیں
عدالتی نظام کو اوورہالنگ کی ضرورت ہے ... مزید پڑھیں
ہم سرسری سوچ والے ... مزید پڑھیں
بھارت میں چنگاری ،، کرتارپور راہداری ... مزید پڑھیں
متعلقہ خبریں
محمد بن سلمان نے ولی عہدی تک کا سفر کیسے طے کیا اور اب تک ان کی حکومت نے کیا اقدامات کیے ہیں
ساہیوال کا واقعہ: سی ٹی ڈی پنجاب کیا ہے اور کیسے کام کرتا ہے؟
امریکی صدر نے افغانستان کی جنگ میں بھارت کے کردار کا مذاق اڑا دیا
" آپریشن آل آؤٹ "تجزیاتی رپورٹ
مقدس مندر میں خواتین داخل‘ تاریخ رقم ، ہنگامے شروع
انڈین کون ہیں اور کہاں سے آئے ہیں؟ انڈیا کی قدیم تاریخ پر گرما گرم بحث
مسلمانوں کی خاموشی انڈیا کے مستقبل کے لیے خطرناک ہوگی
طالبان کابل پر قبضے کے لیے تیاری کر چکے ہیں
غلط مرد سے محبت: ’پہلے دلت شوہر کو والد نے قتل کروا دیا اب دوسرے کے قتل کا خوف‘
میکسیکو میں لاپتہ افراد کی لاشیں ڈھونڈتی مائیں

مقبول خبریں
بھارت نے حملہ کیا تو بھرپور جواب دیں گے:وزیراعظم
اس ہندوستانی نے 39 بار کیا پیار، 39 بار کی شادی اور ہیں 101 بچے
پی ایس ایل 4 ، امریکی گلوکار پٹ بل نے افتتاحی تقریب میں شرکت سے معذرت کرلی
پاکستان نے پہلے ٹی ٹوئنٹی میں ویسٹ انڈیز کو 9 وکٹوں سے شکست دے دی
ماہرہ خان نے ایک اور بین الاقوامی اعزاز اپنے نام کرلیا
شاہ سلمان کی آمد ۔۔۔بہار کی آمد
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔
انسانی نظامِ ہاضمہ میں 2000 نئی اقسام کے بیکٹیریا دریافت
وہ خاتون جس کا پیشہ ہی بچے پیدا کرنا ہے
اپنے بچوں کو اٹھا کر پھرنے والا باہمت پرندہ
اپنے بچوں کو اٹھا کر پھرنے والا باہمت پرندہ
پاکستان سائبر سیکیورٹی کے حوالے سے دنیا کے 10 بدترین ممالک میں شامل
شرح پیدائش پنجاب میں کتنی ہے اور خیبر پختونخوا میں کتنی؟ اعدادوشمار سامنے آگئے
بیویاں شوہروں کو طلاق دے سکیں گی والا نکاح نامہ زیرغور نہیں، اسلامی نظریاتی کونسل
محمد بن سلمان نے ولی عہدی تک کا سفر کیسے طے کیا اور اب تک ان کی حکومت نے کیا اقدامات کیے ہیں
ویڈیو گیلری

آزادی کی تحریکوں کو دبایا تو جا سکتا ہے لیکن ختم نہیں کیا جا سکتا : پاکستانی ہائی کمشنرعبدالباسط

بھارتی اشتعال انگیزی کا ذمہ داری سے جواب دے رہے ہیں ،عاصم باجوہ

پاکستان اورسعودی عرب حقیقی بھائی ہیں،علما اکرام مسلم امت کے اتحاد میں کردار ادا کریں:امام کعبہ

بڈگام میں بھارتی فوج کی فائرنگ، مزید 8 کشمیری شہید، پاکستان کا شدید احتجاج

فرانس میں فائرنگ کرکے 3 افراد کوقتل کرنے والے حملہ آورکی ہلاکت کی تصدیق

سپورٹس
پی ایس ایل 4 ، امریکی گلوکار پٹ بل نے افتتاحی تقریب میں شرکت سے معذرت کرلی
دبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کا باقاعدہ آغاز مزید پڑھیں ...
ویب ٹی وی
ٹورازم
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔
پاکستان میں خوبصورت اور دلکش مناظر کی کمی نہیں ہے۔ posted by Abdur مزید پڑھیں ...
انٹرٹینمینٹ
ماہرہ خان نے ایک اور بین الاقوامی اعزاز اپنے نام کرلیا
دبئی (ویب ڈیسک) عالمی شہرت یافتہ پاکستانی اداکارہ ماہرہ خان نے مزید پڑھیں ...
مذہب
بیویاں شوہروں کو طلاق دے سکیں گی والا نکاح نامہ زیرغور نہیں، اسلامی نظریاتی کونسل
اسلام آباد(ویب ڈیسک) اسلامی نظریاتی کونسل کا کہنا ہے کہ مزید پڑھیں ...
بزنس
سعودی عرب کی پاکستان کو 2 پاور پلانٹس خریدنے کی منہ مانگی پیشکش
لاہور(ویب ڈیسک) سعودی عرب نے پنجاب کے دو پاور پلانٹس بغیر بولی مزید پڑھیں ...